اس دور میں پردہ کرامت ہے

{ایک باپردہ نو مسلم خاتون کا دنیا کو پیغام}

ارشادعرشیؔ ملک

مجھے کہتی ہے جب دنیا کہ کیا رکھا ہے پردے میں

ہے کیوں اتنا اہم کپڑے کا یہ سادہ سا اِک ٹکڑا

تو میں ان کو بتاتی ہوں بہت خود اعتمادی سے

مری بہنو !  نہیں ہے یہ فقط گز بھر کا اِک کپڑا

یہ میرے فخر کی ،عزت کی، حُرمت کی علامت ہے

خدا کے حکم پر عرشیؔ اطاعت کی علامت ہے

یہ شرطِ استقامت ہے ،قناعت کی علامت ہے

…………………………

مجھے یہ ہر گھڑی چوکنّا و ہشیار رکھتا ہے

سدا لبیک کہنے کے لئے تیار رکھتا ہے

علامت ہے یہ ایسی زیست کو دھتکار دینے کی

جو ہے ہم عورتوں کے واسطے تذلیل کا باعث

ہمیں ہر حال میں ماحول کی تطہیر کرنا ہے

وجودِ زن کو ہم نے باعثِ توقیر کرنا ہے

یہ پردہ ہی ہے جو اپنے تحفظ کی ضمانت ہے

قسم اللہ کی اس دور میں پردہ کرامت ہے

…………………………

Rate: 0